میں اور میرا شوہر

این این ایس نیوز! میرے شوہر نے مجھے میرے کزن کے ساتھ ر ات کے وقت تنہا چھت پر دیکھ لیا تھا (ہم نے نہیں کیا تھا اور نا ہی ہم دونوں بے لبا س ہوۓ تھے میرے کزن نے مجھے صرف پکڑا ہوا تھا )

میرا شوہر میرے پاس آیا اس سے پہلے میں اسے کچھ کہتی اسنے مجھے ایک تھ پڑ مارا اور دوسرا بھی مارنے لگا تھا کہ اسکے اور میرے درمیان میری خالہ کا بیٹا میرا کزن آ گیا اور اسے روک دیا اور کہا تمہاری ہمت کیسے ہوئ اسے مارنے کی میرے شوہر نے کہا بیوی ہے یہ میری میرے آگے سے ہٹ جاؤ ورنہ تیرا وہ حشر کروں گا کہ ساری زندگی یاد رکھو گے ۔ میرے کزن نے کہا میں پیار کرتا ہوں اس سے اور اس نے میرے شوہر کا گر یبان پکڑ لیا ۔ میرا شوہر

جسمانی لحاط سے میرے کزن سے طاقت وار تھا میرے شوہر نے اسے منہ پر ایک کک ماری تو اسکے منہ سے خونبہنے لگا میں اپنے شوہر کے آگے آ گئ اور اسے کہنے لگی تمہارا دماغ ٹھیک ہے تم کیوں مار رہے ہو اسے میرے یہ الفاظ کہنے کی دیر تھی کہ میرے شوہر مجھ ایک اور زور دار تھ پڑ مارا تو میں نیچے گر پڑی اور پھر اس نے مجھے بازوں سے پکڑا اور نیچے چلنے لگا نیچے چلنے سے پہلے اس نے میرے کزن سے کہا تجھے تو میں بعد میں دیکھوں گا ۔ ہم نیچے اپنے کمرے میں آ گۓ تو میرے شوہر نے کہا تمہارے ساتھ جو کرنا ہے وہ تو گھر جا کر کروں گا یہاں نہیں ۔

ہم تین دن بعد ہی واپس لوٹنے والے تھے لیکن صبح میرے شوہر نے کہا کہ ہم آج ہی واپس لوٹ رہے ہیں اسنے کسی کی بھی نہیں سنی اور ہم اسی دن ہی گھر واپس لوٹ آۓ ۔ گھر آ کر رات کو ہمارے درمیان کافی بحث و تکرار ہوئ کچ اس نے مجھے بولا تو بہت کچھ میں اسے بولا آخر میں جو میں چاہتی تھی اس میں نے بولا کہ مجھے آپ سے طلاق چاہیے میں تمہارے ساتھ ایک منٹ بھی نہیں رہے سکتی تو اس نے کہا میں ہر گز ایسا نہیں کر سکتا تو میں نے کہا اگر تم نے مجھے طلاق نہیں دی تو میں عدالت میں چلی جاؤ گی اور خلع کر لوں گی کچھ دیر وہ خاموش رہا اس کے بعد جو اسنے کہا تو آگے سے میرا منہ بند ہوگیا ۔اس نے مجھے کہا مجھے بھی تمہارے ساتھ ساری زندگی نہیں رہنا مجھے بھی خوش رہنے کا حق ہے میں نے اتنا تم سے پیار کیا کہ تمہیں تکلیف دینے کا تصور بھی نہیں کر سکتا لیکن تم ۔ تمہیں طلاق چاہیۓ نا تو جاؤ اپنے باپ سے پوچھ کر آؤ کہ میں طلاق لیے کر آ رہی ہوں تمہیں طلاق دینے کے بعد تمہارے باپ نے یا تمہاری فیملی نے مجھے کچھ کہا یا مجھ سے طلاق کی وضاحت طلب کی تو میں انکو پھر سب سچ سچ بتا دوں گا ۔

تمہیں اگر طلاق چاہیے مجھ سے تو تمہیں مجھے ایک بات کی گارنٹی دینی ہوگی کہ تمہارے خاندان کی طرف سے مجھ پر کوئ سوال نہیں داغا جاۓ گا ۔ مجھے پتہ تھا جو سلوک میں نے اپنے شوہر کے ساتھ کیا ہے یا جو کر رہی ہوں اگر میری فیملی والوں کو پتہ چل گیا تو میرا باپ پکا مجھے تو نہیں چھوڑے گا ۔ دو دنوں بعد میرا شوہر واپسی ملتان چلا گیا جبکہ دوسری طرف میرے کزن کا غصہ عروج پر تھا اس نے کہا تیرے شوہر کو تو میں نہیں چھوڑنے والا اب اسے میں جان سے مار ڈالوں گا ۔ میں نے اسے کہا کہ میں اپنے شوہر کو مارنا نہیں چاہتی میرا کزن جو کہ بہت غصہ میں تھا میرے شوہر کو گالیاں بھی نکالتا رہا اور کہتا رہا کہ اس میں اب نہیں چھوڑوں گا ۔ جبکہ میرا شوہر اسنے مجھے تو کیا کبھی میں نے اسکے منہ سے گالی تک نہیں سنی میرا شوہر غصے کی حالت میں بھی تمیز کا دائرہ نہیں چھوڑتا عورت کی عزت کرنا اسے اچھی طرح سے آتا تھا ۔

اسکے بعد میرے کزن نے میرے شوہر کے ساتھ فون پر رابطہ کرنا شروع کر دیا ( وہ واپس اپنی ماں کے ساتھ کراچی نہیں گیا تھا جبکہ وہ اپنے بڑے بھائ کے ساتھ لودھراں شہر میں رہنے لگا انکے پاس دو گھر تھے ایک لودھراں میں اور دوسرا کراچی میں ) اور میرے شوہر اور میرے کزن کے درمیاں اختلافات بڑھنے لگے اس اسنا میں میرا شوہر مجھ سے دور ہوتا گیا جو ہفتہ دس دن بعد گھر آتا تھا اب وہ کئ ہفتوں بعد آتا اور موبائل پر جو ہفتے میں دو سے تین مرتبہ بات کرتا تھا اب کئ کئ دنوں بعد تک فون کرتا ۔ اور دوسری طرف میرا کزن اسکا مجھ سے رویہ خراب ہونے لگا اور وہ مجھ سے گندی گندی باتیں کرنے لگا اور مجھ سے جسم کی مسلسل مانگ کر رہا تھا جو کہ اسکی بار میں نے سختی سے منع کر دیا اب مجھے اپنے کزن سے فون پر بات کرنے کا بھی دل نہیں کرتا تھا اور مسلسل مجھے دھمکیاں دیتا رہا کہ تمہارے شوہر سے بدلا لینا ہے اسے میں نہیں چھوڑوں گا میں اسے سمجھاتی رہی کہ مجھے اسے مارنا نہیں ہے کیونکہ اس نے کبھی مجھے کوئ تکلیف نہیں پہنچائ جب وہ نہیں مانا تو میں نے پھر اسے کہا کہ اگر تم نے میرے شوہر کو ذرا سی بھی تکلیف پہنچائ تو میں تجھے پکا نہیں چھوڑوں گی میں تمہیں سمجھا رہی ہوں کہ مجھے کچھ وقت دے دوں میں اپنے شوہر سے علحیدگی اختیار کر کے تمہارے پاس لوٹ آؤں گی ۔

میرے کزن نے کہا تم مجھے نہیں چھوڑوں گی اس شوہر کی خاطر دیکھوں اب میں کیا کرتا ہوں اسکے ساتھ اور اسنے فون کاٹ دیا ۔لیکن مجھے ڈر تھا کہ کہیں وہ میرے شوہر کے ساتھ کچھ کر نا دے میں نے دوسرے دن شوہر کو فون کیا اور اسے کہا کہ میرے کزن نے مجھے کہا کہ میں تمہارے شوہر سے بدلہ لوں گا اسے نہیں چھوڑوں گا تم پلیز اسے مت ملنا میرا شوہر ہنسنے لگا اور کہا تمہیں کب سے میری فکر ہونے لگی ہے تم بھی تو یہی چاہتی ہوں میں نے کہا میں تمہیں کوئ نقصان نہیں پہچانا چاہتی اس نے میری بات نہیں سنی اور موبائل بند کر دیا ۔ اسکے بعد میرے کزن نے میرے شوہر کو اکیلے ایک ویرانی جگہ ملنے کیلۓ بلایا میں نہیں جانتی اسنے میرے شوہر کو کیا کہ کر بلایا اور میرا شوہر اکیلے اس سے ملنے چلا گیا جبکہ میرا کزن اپنے کسی دوست کو بھی اپنے ساتھ لایا تھا جس کا مجھے بعد میں پتا چلا تھا میرے شوہر اور میرے کزن کے درمیان کیا باتیں ہوئ میں جانتی لیکن اسی ملاقات میں ہی میرے شوہر اور میرے کزن کی لڑائ ہو گئ ہوگئ اس لڑائ میں میرے کزن کا بازوں ٹوٹ ٹوٹ گیا جبکہ میرے کزن کی طرف سے میرے شوہر پر گولی چلا دی گئ جس سے میرا شوہر بہت زیادہ زخمی ہو گیا جبکہ میرا کزن اور اسکا دوست وہاں سے بھاگ گۓ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *