شوھر کو بیوی کی جگہ کیا ملا

این این ایس نیوز!بھارتی ریاست اتر پردیش میں ایک دولہا کے اس وقت ہوش اڑ گئے جب اس نے سہاگ رات کو اپنی بیوی کا گھونگھٹ اٹھایا۔

بریلی شہر کے نظام علی کی شادی ہوئی ، جب سہاگ رات کی باری آئی اور دولہے نے دلہن کا گھونگھٹ اٹھایا تو اس کے تو ہوش ہی اڑ گئے۔ اس کی جس سے شادی کرائی گئی تھی وہ کوئی لڑکی نہیں بلکہ ایک خواجہ سرا تھا۔جب دولہا نے اس معاملے پر شور کیا تو ” دلہن” نے اپنے گھر والوں کے ساتھ مل کر دولہا والوں کی بھرپور ٹھکائی کی اور اس کے بعد زیورات سمیٹ کر فرار ہوگئے۔ خواجہ سرا کے گھر والے جاتے ہوئے یہ دھمکی بھی دے گئے کہ اگر کوئی بھی قانونی قدم اٹھایا تو پورے گھر والوں کو جیلمیں ڈلوادیں گے۔

بریلی کے نظام علی کی شادی 22 جون کو ہوئی تھی لیکن اس کی ” دلہن” کی دھمکی اتنی کارگر ثابت ہوئی کہ اس نے کئی مہینے بعد جا کر پولیس سے رابطہ کرکے فریاد رسی کی درخواست کی ہے۔

یاد رہے بھارت میں ایسے واقعات پیش آتے رہتے ہیں جہاں ایک خاتون نے 8عمر رسیدہ مردوں کے ساتھ شادی کرکے انہیں جمع پونجی سے محروم کر دیا۔ اس خاتون کا نام مونیکا بتایا گیا ہے جس نے گزشتہ 10سالوں میں 8مردوں سے بیاہ کیا۔ اس کا شکار ہونے والا آخری شخص بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر غازی آباد کا رہائشی جگال کشور تھا جس کی اہلیہ گزشتہ سال انتقال کر گئی تھی اور اس کا اکلوتا بیٹا اپنے بیوی بچوں کے ساتھ الگ گھر میں منتقل ہو گیا تھا۔

جگال کشور نے تنہائی سے تنگ آ کر شادی کا فیصلہ کیا۔ایک روز اخبار میں’کھنہ ویاہ کیندر‘ نامی ایک میرج بیورو کی طرف سے دیا گیا اشتہار اس کی نظروں سے گزرا اور اس نے شادی کے لیے ان سے رابطہ کر لیا۔ میرج بیورو نے اس کی مونیکا سے شادی کروا دی۔ دو ماہ تک دلہن جگال کشور کے ساتھ اس کے گھر میں رہی اور دو ماہ بعد اچانک غائب ہو گئی۔ جب جگال نے گھر کی صورتحال دیکھی تو پتا چلا کہ تمام زیورات اور نقدی غائب تھی، جن کی مجموعی مالیت 15لاکھ بھارتی روپے بنتی ہے۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *