سعودی عرب میں پولیس کاایک گھر پر چھاپہ لڑکیوں سے وہاں کیا کام کروایا جا رہا تھا جو 100 سالہ تاریخ میں نہیں ہوا

جدہ(این این ایس نیوز) سعودی عرب میں عرب ورکرز کا ایک گروہ خواتین گھریلو ملازمین کو غیرقانونی طور پر ٹھہرانے اور ان سے غیرقانونی طریقے سے کام کرانے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا۔ سعودی گزٹ کے مطابق پولیس کو ایک گھر کے متعلق اطلاع ملی کہ اس میں کچھ مشکوک سرگرمیاں جاری ہیں۔ اس پر پولیس نے دیگر ایجنسیوں کے ساتھ مل کر گھر پر چھاپہ مارا تو وہاں سے کئی خواتین بھی برآمد ہوئیں جنہیں غیرقانونی طور پر وہاں رکھا جا رہا تھا۔

رپورٹ کے مطابق اس گھر سے کئی ایسے مرد ورکرز بھی گرفتار ہوئے، جن کا تعلق مختلف عرب ممالک سے تھا۔ یہ لوگ ان خواتین کو غیرقانونی طور پر اس گھر میں ٹھہرائے ہوئے تھے اور غیرقانونی طور پر ان سے کام کروا رہے تھے۔ سعودی عرب کی وزارت انسانی وسائل و سماجی ترقی کی طرف سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ وزارت انسانی سمگلنگ کو روکنے کے لیے سخت اقدامات اٹھا رہی ہے۔ اس چھاپے میں گرفتار ہونے والوں کے خلاف بھی سخت قانونی کارروائی کی جائے گی۔

Comments are closed.