38 سالہ خاتون نے 23 سالہ لڑکے سے محبت کی شادی کرنے کے لیے اس کے گھر والوں کو 5 کروڑ جہیز میں دیے پھر لڑکے نے شادی کے بعد کیا کیا

این این ایس نیوز! کبھی کوئی آپ سے یہ کہے کہ پیسہ زندگی میں سب سے زیادہ اہم نہیں ہوتا کیونکہ آپ اس سے محبت، خوشی یا وفاداری نہیں خرید سکتے تو آپ اس شخص کو چین میں ہونے والی اپنی نوعیت کی اس عجیب شادی کا حوالہ دینا مت بھولیے گا۔ آپ بھلے پیسوں سے اپنی محبت نہیں خرید سکتے لیکن اس سے آپ اپنی پسند کے کسی شخص سے شادی ضرور کر سکتے ہیں۔  چین میں  ہینان صوبے کی ایک خاتون نے 5 ملین یوان (5 کروڑ سے زائد رقم) اپنی پسند کے لڑکے سے شادی کرنے کے لیے ادا کی ہے۔

آپ یقیناً حیران ہوں گے کہ آخر ایسی کیا وجہ ہے کہ اتنی بڑی  رقم کی ادائیگی کی گئی اور وہ بھی خاتون کی طرف سے۔ بات دراصل یہ ہے کہ خاتون کی عمر38 سال جبکہ لڑکے کی عمر 23 سال ہے۔ یہ دلہا اپنی دلہن سے پورے پندرہ برس چھوٹا ہے۔
اس کے علاوہ اس خاتون کا ایک چودہ سالہ بیٹا بھی ہے۔چونکہ لڑکے کے والدین اس شادی کے لیے رضامند نہیں تھے تو اس نے انہیں جہیز کی پیشکش کی جو کہ اتنی زیادہ تھی کہ وہ فوراً اس شادی پر رضامند ہو گئے اور اسے اپنی بہو تسلیم کر لیا۔ایپل ڈیلی نے جوڑے کی ایک ویڈیو پوسٹ کی ہے جس میں اسے انہیں ایک سرخ رنگ کی اسپورٹس کار میں بیٹھے دیکھا جا سکتا ہے۔ مزید یہ کہ دلہن نے اپنی امارت کا اظہار کرنے کے لیے سونے کے ہار، بالیاں اور بریسلٹ وغیرہ پہنے ہوئے ہیں۔ یہ شادی شنگھائی شہر میں 10 جنوری کو منعقد ہوئی۔

Comments are closed.