اس رمضان بس یہ 10ہی روزوں میں سوکھ کر کانٹا ہوجاؤ گے،موٹی توند اندر عیدپر خوشی سے پھولے نہیں سماؤ گے

این این ایس نیوز! دنیا بھر میں حد سے زیادہ وزن اور موٹاپے سے ہر سال لاکھوں افراد موت کا شکار ہو رہے ہیں۔ بچوں سے لے کر بوڑھوں تک موٹاپے میں مبتلا پائے جا رہے

ہیں۔وزن کے بڑھنے میں کیلوریز کا کردار براہ راست ہوتا ہے۔ یہ بات اہم ہے کہ آپ جتنی کیلوریز کھاتے ہیں اس میں سے کتنی آپ کے جسم میں بچ جاتی ہیں۔اگر آپ اپنے جسم میں ضرورت سے زیادہ کیلوریز بچا رہے ہیںاور جسمانی مشقت کے ذریعے اسے استعمال نہیں کر رہے تو آپ کا وزن بڑھے گا۔حد سے زیادہ وزن اور موٹاپے سے بچنے کے لیے ضروری ہے کہ آپ اپنا غذائی چارٹ بنائیں جس میں ہر چیز کے سامنے اس کی کیلوریز درج ہوں۔ ورزش کا اہتمام اور فاسٹ فوڈز سے پرہیز کریں۔وزن کو بڑھانے یا گھٹانے کیلئے رمضان سے بہتر کوئی مہینہ نہیں یہ آپ پر منحصر ہے کہ آپ اپنا وزن بڑھاتے ہیں یا پھر کم کرتے ہیں ۔ آج جو طریقہ بتائیں گے اس کے استعمال سے وزن تیزی سے گھٹے گا ۔ لیکن ہماری باتوں پر عمل لازمی کرنا ہوگا ۔سب سے پہلے بات کرتے ہیں

سحر ی کی جس کیلئے آپ نے عشاء کی نماز کے بعد ایک آسان سی مشروب بنا کر رکھنی ہے اس کیلئے دو گلاس پانی لینا ہے ۔ پھر اسمیں لیموں ڈالنا ہے ایک چھوٹے رس دار لیموں کو کاٹ کر اس پانی میں ڈال دیں ۔ پھر ایک چھوٹے سائز کا کھیرا بھی اس میں کاٹ کر ڈال دیں ۔ پھر پودینے کی پتیاں لیکر اس میں ڈالنی ہے ۔ پھر اس پانی کو ڈھک کر رکھ دیں ۔ دھیان رکھنا ہے فریج میں نہ رکھیں صبح سحری کیوقت چھان کر پی لینا ہے۔ سحری میں پیٹ بھر کر کھانا کھائیں لیکن پراٹھے کی جگہ روٹی کا استعمال کریں اور کم تیل والا کھانا کھا لیں ۔چاہیں تو اس کیساتھ ہلکی غذا بھی استعمال کرسکتے ہیں ۔کھجور سے روزہ کھولیں ۔ ایک ہی کھجور کھائیں پھر فروٹس کا استعمال کریں اس کے بعد پانی پئیں ۔پانی نارمل ہونا چاہیے ٹھنڈا نہ ہو ۔آپ نے مشروبات کا استعمال ترک کردینا ہے ان سے بہت تیزی سے وزن بڑھتا ہے ۔ پھر چاہیں تو تلی ہوئی اشیاء کو کھا لیں لیکن کم سے کم استعمال کریں ۔ خصوصاً مرچ سے پرہیز کریں پھر مغرب کی نماز کے بعد کھانا کھا لیں ۔ ایسی غذ ا کا استعمال کریں جو ہلکی بھی ہو اور پروٹین سے بھرپور ہو ۔ سالن وغیرہ بھی کھا سکتے ہیں لیکن اس میں تیل کی مقدار کم ہو۔آپ ان طریقوں پر عمل کریں انشاء اللہ ہمیں دعائیں دیں گے ۔ آپ کا وزن بہت تیزی سے کم ہوگا اور باہر نکلا ہوا پیٹ اندر ہوجائیگا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *