پیرو مرشد نے مرید کی شادی کسی لڑکی کی جگہ خواجہ سراہ سے کروادی

رضا ٹی وی! پاکستان کے پنجاب کے ایک علاقہ جہلم میں ایک عجیب و غریب واقعہ پیش آیا ہے ۔ یہاں ایک شخص کا نکاح خواجہ سرا سے کرادیا گیا ۔ پاکستانی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق حال ہی میں سجاد نام کے ایک شخص کی شادی نازیہ کے ساتھ ہوئی تھی ۔ میڈیا رپورٹس جھیلم کے علاقہ کالا گجراں کے سجاد کی شادی دو دن قبل سوہاوہ کی نازیہ سے ہوئی تھی ۔جب رسمیں پوری ہونے کے بعد دولہا اپنی بیوی کو گھر لے کر آیا تو سہاگ رات میں اس کو پتہ چلا کہ اس نے جس سے شادی کی ہے ، وہ ایک خواجہ سرا ہے ۔

یہ دیکھ کر دولہا کے ہوش اڑ گئے ۔ تاہم شرمندگی کے مارے دولہا کسی کو بتا نہ سکا اور شیڈول کے مطابق ہی ولیمہ بھی کردیا ۔بعد میں ولیمے کی تقریب کے بعد خواجہ سرا دلہن کو اس کے مائیکہ بھیج دیا گیا ۔ یہی نہیں دلہن پہلے بھی مطلقہ تھی ۔تاہم جب رشتہ داروں نے دولہن کو اتنی جلدی مائیکہ بھیجنے کی وجہ پوچھی تو دولہا کو اصل وجہ بتانی پڑگئی ۔اس نے بتایا کہ اس کی بیوی لڑکی نہیں بلکہ خواجہ سرا ہے ۔میڈیا رپورٹس کے مطابق دولہا سجاد کا کہنا ہے کہ پندرہ ماہ پہلے پہلی بیوی کی وفات کے بعد اس نے بچوں کی دیکھ بھال کے لیے دوسری شادی کی تھی ۔دولہا نے بتایا کہ گھر آکر معلوم ہوا کہ دلہن لڑکی نہیں خواجہ سرا ہے ۔ دلہن کے خواجہ سرا ہونے کے انکشاف کے بعد اس نے نازیہ کو اس کے میکے بھیج دیا ہے۔پاکستانی میڈیا رپورٹس میں دولہے کے قریبی ذرائع کے حوالہ سے بتایا گیا ہے کہ یہ رشتہ دونوں کے پیر نے کرایا تھا جس کی وجہ سے زیادہ چھان بین بھی نہیں کی گئی تھی ۔بچوں کی دیکھ بھال اور ضرورت کو سامنے رکھتے ہوئے پیروں نے ہی شادی کا مشورہ دیا تھا۔ 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *