کسی کو اپنے پیار میں پاگل کرنے کا زبردست طریقہ صرف سچی محبت کرنے والوں کے لیے یہ طریقہ کارآمند ہے

این این ایس نیوز! آج میں آپ کو بتانے والا ہوں کہ کسی بھی انسان کو خود سے پیار کرنے پر مجبور کیاجاسکتا ہے۔ لفظوں پر غور کریں ۔ مجبور کیسے کیا جاسکتا ہے؟ کئی بار ایسا ہوتا ہے ہم کسی انسان کی طرف کشش محسوس کرتے ہیں۔ جب کہ اس انسان ایسا کچھ خاص ہوتا نہیں ہے۔کہ اس کے پیچھے پڑا جائے۔ مگر ہم ناچاہتے ہوئے اس کے جانب کھنچے چلے جاتے ہیں۔ اس کودیکھتے ہیں۔ وہ ہمیں اچھالگنے لگتا ہے۔ تو ہم اپنے ایسا کیا کریں لوگ ہماری طرف کھنچے چلے آئیں ۔

اور نا چاہتے ہوئے بھی وہ انسان ہمارے سب سے قریب آجائے ۔ اور ہم سے محبت کرنے لگ جائے۔ تو یہ فارمولا سمجھنے کے لیے اس آرٹیکل کو پڑھنا لازمی ہے۔ پہلا سائیکلولو جیکل ہے ان سے انویسٹ کراؤ۔ تین چیزیں جو کہ آپ کو ہمیشہ انویسٹ کروانی چاہیں۔ جو پہلی چیز ہے وقت۔ لوگوں کا وقت انویسٹ کرواؤ۔ دیکھو وقت کی بہت قیمت ہوتی ہے ۔ اگر آپ کسی کو اپنا بہت زیادہ وقت دیتے ہیں۔ تو آپ کہیں نہ کہیں اس سے بہت زیادہ توقعات وابستہ کرلیتے ہیں۔ اور کسی حد تک اس پر منحصر ہوجاتے ہیں ۔ اور دوسری چیز اس کی عادت لگ جاتی ہے۔ اور انسان کا کس پتلہ ہوتا ہے عادتوں کا۔ہم روز کسی سے دس بجے تک بات کرتے ہیں۔ اور ایک دن بات نہ کرے ۔ تو ہمیں کتنی بے چینی ہوتی ہے۔ یہی اس کے ساتھ بھی ہوتا ہے۔ بس ضرورت ہے کہ آپ باتیں اچھی کریں۔ باتیں دل لبھانے والی کریں۔ دوسری چیز ہے پیسا ۔ آپ کو عجیب لگا ہوگا۔ لیکن سمجھیں گے تو آپ کو مز ہ آئے گا۔ پیسے انویسٹ کرنے کامطلب کیا ہے ۔ اگر آپ کسی کو پیسہ انویسٹ کرتے ہو اور اس پر خرچہ کرتے ہو تو آپ اس پر اپنا حق جتانا لگ جاتے ہو۔ حق کس پر جتاتے ہیں۔ اپنوں پر۔ حق جتاتے جتاتے اس انسان کو پتہ بھی نہیں چلے گا کہ کب اس نے آپ کو اپنا سمجھ لیا ہے۔ آپ دونوں کے بیج اپنا پن آجائے گا۔ کیونکہ وہ حق جتائے گا۔ اس کو ریورس سائیکلولو جیکل۔جوکہ ریورس استعمال ہوتی ہے۔

سائیکلولو جیکل کیا ہوتی ہے؟ کسی پر جب ہم اپنا پن دکھاتے ہیں تو اس پر حق جتاتے ہیں۔ ریورس سائیکلولو جیکل کیاہوئی؟ پہلے اس سے حق جتواؤ ۔ یہاں تک وہ آپ کو اپنا سمجھنے لگ جائے ۔ کیا ہے کہ آپ کبھی اس کو یار میرے پاس سوروپے نہیں ہے۔ سوروپے مانگو اور دو تین دن بعد واپس کردو۔ پیسے رکھنے نہیں ہیں۔ بس لے کر کچھ دن بعد کہیں نہ کہیں واپس لوٹا دو۔ اور کبھی اس ضرورت ہوتو آپ دے دو۔ لازمی نہیں کہ پیسے مانگو ادھار اچھا نہیں لگتا تو کچھ اور مانگ لو۔ مذاق میں کہو یار چاکلیٹ کھلا دو۔ اس کو یہ نہ لگے کہ آپ لالچی ہو۔ اس سے کہیں نہ کہیں وہ قریب آنے لگ جائے گا۔

تیسری چیز جو آپ کو کرنی ہے وہ اس کی مدد۔ آپ کو اس سے مدد مانگنی ہے۔ یہ بھی ریورس سائیکلولو جیکل سے ملتی ہے۔ آپ کے سامنے دو انسان ہیں ایک ہے آپ کا سگا بھائی۔ اور ایک ہے آپ کا دوست ۔ کس کی مد د پہلے کریں گی۔ بھائی بہن کی۔ یہی چیز ہوتی ہے جو اپنا ہوتا ہے ہم مدد اس کی کرتے ہیں۔ اپنی صورتحال کے حساب سے جس طرح کی بھی مدد آپ اس سے مانگ سکو ضرور مانگو۔ چاہے کچھ سوال پوچھ کر۔ چاہے کسی بات میں اس کو بڑ امان کر۔ چاہے اس سے جسمانی مدد لے کر۔ وقت، پیسہ اور مدد یہ تینوں چیزیں انویسٹ کرواؤ۔ اور اگر کسی نے کوئی چیز انویسٹ کردی ۔ تو آپ کو چھوڑ کر کبھی نہیں جاسکتا ۔ اب بات کرتے ہیں دوسرے سائیکلولو جیکل ہیک پر ۔کہ لوگوں سے سوالات کرو۔ آپ جس انسان سے پیارکرتےہیں کہ وہ آپ کے قریب آئے تو اس سے سوال کرو۔ سوال کرنا کوئی بری بات نہیں ہے لیکن دلچسپ سوال کرنا ضروری ہے۔ وہ سوال کرو جس کا جواب دینے میں اس کو مز ہ آئے۔ اور ساتھ میں اہم بات یہ بھی ہے کہ اس کے جواب کو سنو۔ تیسرا سائیکلولو جیکل ہیک ہے اس کے رازوں کوراز ہی رہنے دو۔ ہمیں تو چغلی کرنے میں بڑا مز ہ آتا ہے۔ جب تک بات آگے نہ پہنچ جائے توان کودرد ہوتا ہے ان کو کھانا ہضم نہیں ہوتا۔ لیکن آپ کو یہ چیز کرنے سے بچنا ہے۔ دیکھو آج نہیں تو کل اس کو پتہ لگ جائے گا کہ آپ کسی اور سے اس کی باتیں کرتے ہو۔ جب اسے پتہ چلے گا وہ آپ کے قریب آئے گا ۔ نہیں۔ وہ آپ سے دور چلا جائے گا۔ تو اس کے سیکرٹ کو راز رکھو۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *